Match Fixing and Corruption in Pakistan Cricket

Welcome to NEWSFLASH, Your News link to Pakistan and beyond . . .
 

Newsflash
 

Subscribe to Cricketer magazine at special  rates in Pakistan

 

Pakistan's premier  website that covers current affairs and news.

 

 

 

 

 

بدعنوانی کا عفریت اور پاکستان کرکٹ

آئندہ چند ہفتوں میں پاکستان  کرکٹ  بورڈ کی انتظامی تقرریاں مکمل ہو جائیں گی اور حالیہ ورلڈ ٹی20 میں شرمناک کارکردگی کے بعد ایک مرتبہ پھر پاکستان کی کرکٹ ٹیم نئی امیدوں کے ساتھ میدان میں اترے گی۔  مگر اس سے پیشتر ایک نئے  تنازعہ نے اس وقت  جنم لیا  ہے  جب  پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان راشد لطیف نے چیف سلیکٹر بننے سے معذرت کر لی۔ 

 

راشد لطیف دنیائے  کرکٹ میں مسٹر کلین  کے نام سے جانے جاتے ہیں۔ کھیل کی تاریخ میں انہوں نے پہلی مرتبہ کر کٹ میں بدعنوانی اور میچ فکسنگ کے خلاف صدا بلند کی۔  اسی بدولت 1990 کے عشرے میں ان کا کیرئر بری طرح متاثر ہوا۔ اس وقت کے اربابِ اختیار نے ان کی کردار کشی بھی کی مگر آنے والے وقتوں نے یہ ثابت کر دیا  کہ بیس سال گزرنے کے بعد بھی پاکستان کرکٹ   میں بدعنوان  اور داغدار کردار کے حامل کرکٹر ز کو کرکٹ ٹیم میں واپس  لانے اور اعلیٰ عہدوں  پر فائز  کرنے کے لئے نت نئے حیلے بہانے تراشے جا رہے ہیں۔

A Special report on India's attempts to wish Kashmir issue away. Rs 50 in Pakistan

راشد لطیف کو چیف سلیکٹر بنانے کی پیشکش  کی گئی تھی مگر پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان نے  اس  ماحول میں اپنے ہاتھ رنگنے کی بجائے اپنی عزت  بچانے میں ہی عافیت جانی۔ راشد کے انکار میں کار فرما عنصر انگلینڈ کرکٹ بورڈ کی منافقانہ پالیسی بھی ہو سکتی ہے۔  

 

جب سچن کی سنچری نے دہشت گرد حملوں کا اثر زائل کر دیا

مگرکیا پاکستان کرکٹ عالمی سطح پر اپنے وقار میں اضافہ کر پائے گی؟ پاکستان میں کرکٹ کے شائقین کے لئے یہ سوال یقیناً تشویش کا باعث ہے۔  ایسا محسوس ہوتا ہے کہ  کرکٹ بورڈ میں اعلیٰ عہدوں پرتعیناتی کے لئے پاکستان میں باوقار کرکٹرز کا فقدان ہے۔

I   

 More Stories on Related Subjects

BJP Leader found guilty of Muslim Massacre (August 30, 2012)

Bangalore Rings Fear for Muslim community (August 23, 2012)

Stories from Pakistan

Consumers in Pakistan being harassed by Telecom Companies, Regulatory Authority remains a silent spectator. (November 17, 2012)

 کرکٹ بورڈ  کی موجودہ انتظامیہ کے لئے 20 کروڑ کی  آبادی کے ملک  میں شفاف کردار والے  عہدےدار ڈھونڈنا  شاید ممکن نہ ہو۔ اسی طرح نئے  ٹیلنٹ کو آزمانے کی بجائے موجودہ چیئر مین محمد عامر جیسے بھٹکے ہوئے نوجوانوں کو راہِ راست پر لانے کی کوشش کریں گے۔

مبصرین کا کہنا ہے کہ پاکستان کو فتوحات سے زیادہ  اپنی  ساکھ کی بحالی پر توجہ دینا ہو گی۔مگر  مستقبل قریب میں پاکستان کرکٹ کے لئے  بدعنوانی کے گرداب سے  نکلنے کے امکانات محدود نظر آتے  ہیں۔

 

Post dated May 10, 2014

Comments: 0 Be the first to comment...

Share your views at feedback@newsflash.com.pk

 

 

 

Send your contributions at editor@newsflash.com.pk

Want to get news alerts from newsflash.com.pk? Send us mail at

newsalerts@newsflash.com.pk


Copyright 2006 the Newsflash All rights reserved

This site is best viewed at 1024 x 768